K electric and hub choky

K electric

*حب۔ کے الیکٹرک کی جانب سے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری کے الیکٹرک کی جانب سے مختلف علاقوں جن میں زہری کالونی،اسد چوک۔مدینہ کالونی، نمرہ کالونی،اکبر کالونی،آلہ آباد ٹاون،اکرم کالونی،چیزل آباد، موندرہ کالونی، ساکران روڈ  سمیت مختلف علاقوں کی بجلی کی سپلائی کے الیکٹرک کی جانب 24 گھنٹے میں 6 گھنٹے لوڈشیڈنگ کا شیڈول جاری کیا گیا تھا مگر کے الیکٹرک کی جانب سے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ متواتر جاری ہے۔ مختلف علاقوں کی 12 گھنٹے سے زائد لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے جو کہ شہریوں کے لے کسی عذاب سے کم نہیں جون جولائی میں شدید گرمی کے باعث شہری اس غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ سے تنگ آگئے ہیں بچے بوڑھے گرمی کے باعث شدید اذیت کا شکار ہیں کے الیکٹرک کے آفس میں متعدد بار کمپلین کرنے کے باوجود کوئی خاطر خواہ جواب موصول نہیں ہوتا کمپلین سینٹر میں پی ٹی سی ایل پر کال اٹینڈ نہیں کیا جاتا رات کے اوقات میں تو کمپلین سینٹر سے کوئی جواب ہی نہیں ملتا جب کے کے الیکٹرک کی جانب سے اوور بلنگ کا بھی سلسلہ جاری ہے چھوٹے اور غریب مزدور طبقے کے گھرانوں کو فیول ایڈجسمنٹ چارجز کے ساتھ 10 سے 12 ہزار کا بل بھیج دیا جاتا ہے جو کہ کے الیکٹرک کی سرا سر زیادتی ہے جبکہ بجلی کی ٹرپنگ کی وجہ سے شہریوں کی قیمتی سامان بھی جل چکے ہیں جبکہ  شہریوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ صبح سویرے ہی کبھی 6 بجے تو کبھی پانچ بجلی بند کر دی جاتی ہے جس سے دفتر اور دیگر جگہوں پر جانے والے شہریوں کو پریشانی کا سامنا ہوتا ہے اور صبح کے وقت لوڈشیڈنگ کے باوجود پھر 9 بجے کے بعد دوبارہ بجلی بند کرکے شہریوں کو عذاب میں مبتلا کر دیا ہے شہریوں کا کہنا ہے کہ کے الیکٹرک کے عملے کو کوئی بولنے والا نہیں دفتر میں ملنے نہیں دیا جاتا ہے اگر کوئی انکے خلاف خبریں لگائے تو اس شہری کے گھر کی بجلی بند کردی جاتی ہے اور مختلف ہیلے بہانوں سے اس کو پریشانی کیا جاتا ہے جبکہ کے الیکٹرک  حب شہر کو بجلی سپلائی کرنے میں مکمل ناکام ہوچکا ہے شہر میں بجلی بند کرکے مختلف بڑے کمپنیوں کو بجلی فراہم کیا جارہا ہیں جس سے شہری پریشان ہیں جبکہ کے الیکٹرک کے عملے کی شہریوں کے ساتھ رویہ بھی درست نہیں  اس سے واضع ہوتا ہے کہ کے الیکٹرک اپنی پوری بدمعاشی پر اتر آیا ہے اور کسی کو ماننے کو تیار نہیں عوامی حلقوں نے اس حوالے سے وزیر اعلی بلوچستان نواب جام کمال خان، ایم این اے لسبیلہ ٹو گوادر جناب محمد اسلم بھوتانی اور ڈی سی لسبیلہ  سے پر زور اپیل کرتے ہوئے نوٹس لینے مطالبہ کیا ہے کہ کے الیکٹرک کی آئے روز اضافی لوڈشیڈنگ سے عوام کو نجات دلائی جائے اور اوور بلنگ سے چھٹکارا دلایا جائے بصورت عوام انکے خلاف سخت احتجاج پر مجبور ہونگے اور کے الیکٹرک کے زیادتیوں کے خلاف دھرنا دیا جائے گا*

No comments

Powered by Blogger.